روزانہ10 بار پڑھنے کا حیران کر دینے والا معجزہ

بعض اوقات ایسا کوئی واقعہ نظر سے گزرتا ہے جو بظاہر ناقابل یقین ہوتا ہے اور دل و دماغ اس کو تسلیم نہیں کرتا مگر وہ حقیقت ہوتا ہے اور اپنے پیچھے ایک ایسا سبق چھوڑ جاتا ہے جو کہ کسی غیبی معاملے کو سمجھنے میں مدد دیتا ہے حال ہی میں آتش زدگی کا ایک واقعہ حاجی کیمپ ٹمبر مارکیٹ میں پیش آیا تھا جس کا کئی روز تک میڈیا پر بھی چرچا رہا اس واقعے کے چند روز بعد بندے کا اس مارکیٹ کے پاس سے گزر ہوا ایسے ہی دل میں خیال آیا کہ ذرا متاثر ہ مارکیٹ کو دیکھا جائے کیونکہ یہ آتش زدگی کا بڑا واقعہ تھا جس میں دو دن تک آگ پر قابو نہیں پایا جاسکاتھا اور لوگوں کا لاکھوں کا نقصان ہوا تھا ۔

چنانچہ بندہ اس مارکیٹ میں پہنچ گیا اور اندر کی صورتحال دیکھنے لگا مارکیٹ کی حالت یہ تھی کہ کسی بھی دکان کا مال نہیں بچا تھا اور پوری متاثرہ مارکیٹ کوئلے کے ڈھیر کا منظر پیش کررہی تھی اور آگ کی شدت اس درجے کی تھی کہ دوکانوں کے لوہے کے گارڈر تک پگھل کردوہرے ہوچکے تھے اصل میں اس مارکیٹ کی دکانیں پکی بنی ہوئی نہیں تھی بلکہ لوہے کے گارڈر کو زمین میں گاڑھ کر ان کے اطراف ٹین کی چادریں لگا کر دکانیں بنائی گئی تھیں جو کہ اب جلی ہوئی لکڑی اور مڑے ہوئے لوہے کے ڈھیر کا منظر پیش کررہی تھیں لیکن حیران کن بات جو وہاں دیکھی کہ جب بندہ متاثرہ مارکیٹ دیکھ کر باہر نکلنے لگا۔

تو دکان کے گیٹ کے پاس ایک منظر نے بندے کے قدم روک لئے منظر یہ تھا کہ لوہے کا ایک پائیپ زمین پر گڑا ہوا تھا جس پر دھوئیں اور آگ کے اثرات تھے اور اس پائیپ پر لوہے کے ایک نٹ پر لکڑی کا ایک ہاتھ لمبا اور ایک بالشت چوڑا تختہ لوہے کے تار سے بندھا ہوا تھا اس تختے پر پیتل کی پتری سے یا اللہ یا سلام لکھا ہوا تھا لکڑی کا یہ تختہ بالکل صحیح سالم تھا اور اس پر آگ کے نشانات تو کجا آگ کا دھواں بھی نظر نہیں آتا تھا جبکہ جس جگہ پر یہ تختہ لٹکا ہواتھا اس کے بالکل برابر میں ایک لکڑی کی بلی لوہے کے ہک سے دیوار میں لگی ہوئی تھی جو کہ اب جل کرکوئلہ بن چکی تھی یہ منظر دیکھ کر بندے نے وہاں کھڑے ایک مقامی آدمی سے پوچھا کیا یہ یا اللہ یاسلام کا کتبہ آگ لگنے کے بعد لگایا گیا ہے۔

اس نے جواب دیا نہیں بلکہ یہ تو بہت عرصے سے یہاں لگا ہوا ہے اور اللہ کی قدرت دیکھئے کہ جب آگ لگی تھی تو اس وقت یہ یہیں تھا مگر آگ نے اس کو نقصان نہیں پہنچایا پھر وہ شخص کہنے لگا کہ آپ سامنے میرے فلیٹ کی گیلری کی طرف دیکھو آگ کی شدت کی وجہ سے اس گیلری کا چھجہ گر چکا ہے اور لوہے کی گرل آگ کی شدت کی وجہ سے پگھل کر مڑ چکی ہے مگر اس کتبے کو کچھ بھی نہ ہوا یہ دیکھ کر بندے کے ذہن میں قرآن کی یہ آیت آئی اللہ فرماتے ہیں یعنی قرآن ہم نے نازل کیا ہے اور ہم ہی اس کی حفاظت کریں گے۔بے شک اللہ تعالیٰ نے جہاں قرآن مجید کی اور اس کی آیات کی باطنی حفاظت فرمائی ہے اسی طرح بعض اوقات ظاہری حفاظت کے مناظر بھی ہمارے ایمانوں کو تازہ کرنے کے لئے اللہ تعالیٰ دکھا دیتے ہیں ۔

اس واقعے سے یہ سبق ذہن میں آیا کہ جب اللہ تعالیٰ اس آگ کی شدت میں اس یا اللہ یا سلام لکھے ہوئے لکڑی کے تختے کی حفاظت فرماسکتے ہیں تو کیا جس کے دل میں اللہ کا نام ہو جس کی زبان پر اس کا ذکر ہو تو اللہ اس کی حفاظت نہیں فرمائیں گے بے شک ضرور اللہ اس کی حفاظت اس سے بھی زیادہ فرمائیں گے ۔اللہ کے ان ناموں کا روزانہ 10 بار ورد کرنے سے آپ کی تمام مشکلات دور ہوجائیں گی کسی بھی قسم کی آگ آپ کو نہ جلا پائے گی اور آپ ہر طرح سے اللہ کی حفاظت میں آجائیں گے ۔اللہ ہم سب کا حامی و ناصر ہو۔آمین

Sharing is caring!

Categories

Comments are closed.