سحری میں حضور ﷺ کا پسندیدہ شربت اک گلاس پی لیں

رمضان کا مہینہ شروع ہوا اور ساتھ ہی موسم گرم ہوگیا ہے۔ اسی مناسبت سے آپ کو ایک ایسا شربت بتانے جارہے ہیں۔ جس کو آپ ﷺ نے بھی استعمال فرمایااور اس کے فوائد کے بارے میں بتایا ۔ یہ شربت گرمی میں پیاس کو ختم کرنے والی ہے۔ اس کے استعمال سے آپ کو طاقت بھی ملے گی۔ اور آپ کو پیاس کا احساس بھی کم ہوگا۔ چاہے گرمی کی شدت چالیس سے پچاس ڈگری تک کیوں نہ ہو۔ سخت گرمی کے مہینے میں روزے ایسے گزرے گا جیسا دسمبرکا مہینہ چل رہاہے۔پیاس اور تھکاوٹ کا احساس ختم ہوجائے گا۔ اس شربت کو آپ نے سحری میں استعمال کرناہے۔ یہ شربت آپ نے کیسے تیار کرنا ہے۔ گرمیوں کے روزوں میں جو سب سے بڑی بے احتیاطی کی جاتی ہے وہ پانی اور شربتوں کا زیادہ استعمال ۔ ہمیں چاہیے کہ شربت کا استعمال بہت کم کریں۔ اور افطار کے فوراً بعد اس کا استعمال بالکل نہ کیاجائے۔ ہم جس شربت کی بات کررہے ہیں۔ اس کو شربت کو “نبیز” کہتے ہیں۔

“نبیز” یعنی کھجور کا شربت۔ جیسا کہ پہلے بھی بتایا ہے کہ رمضان کا مہینہ چل رہا ہے اور موسم بھی گرم ہے۔ اور اس مہینے کے گرم روزوں کے لیے ایک شربت بتاتے ہیں۔ جس کا تعلق دور نبوی ﷺ کی معمولات سے ہے۔احادیث کی کتابوں میں نبوی غذاؤں کا مطالعہ کرتے ہیں ۔ تو نبیز ایسی اصطلاح ملتی ہے جس کا استعمال اہل عرب اب بھی کرتے ہیں۔ ویسے تو کھجور کا استعمال گرمی اور تری دکھاتا ہے۔ لیکن اگر اسی کھجور کو پانی میں بھگو کر اور اس کا شربت بنایا جائے تو اس سے زیادہ پر تاثیر اور تسکین سے بھرپور شاید کوئی شربت ہوگا۔ ویسے بھی اس وقت پوری دنیا میں دل کے امراض انجائنا ہارٹ اٹیک کے لیے کھجور کا استعمال بہت تیزی سے رواج پکڑ رہا ہے۔ کیونکہ دنیا واپس فطرت کی طرف پلٹ رہی ہےاور کھجور فطرت ہے۔ اب اس کو کیسے تیار کرنا ہے۔ تاکہ رمضان میں اس سے بھرپور لطف اٹھا سکیں۔ ہرکوئی پریشان ہے کہ رمضان کے مہینہ شروع ہوچکا ہے۔

اور گرمی کا مہینہ ہے۔ پیا س ، لو ، حدت ااور حبس ویسے بھی برداشت نہیں ہوتی پھر روزے کے ساتھ کیسے برداشت ہوسکتی ہے۔ ایسے میں کیا کرسکتےہیں۔ ایسا کریں کہ روزہ رکھنے کے بعد دو بڑے چمچ گلا ب کے پھولوں کا گلقند کھاکر اوپر سے ایک گلاس پانی پی لیں۔ یا پھر اس سے بہتر ہے کہ گلا بوں کے پھولوں کے دو چمچ کھا کر اوپر سے کھجور کا شربت پی لیں۔ اسی طرح افطار کے وقت کھجور سے افطار کرکے چسکی چسکی کھجور کا شربت پئیں گھونٹ گھونٹ نہ پئیں۔ پیاس، گرمی ، حدت، جلن، سارے جسم کی نڈھالی پل بھر میں ختم ہوجائےگی۔ اس کو بنانے کے لیے حسب مقدار کھجور لے کر شام کو پانی میں بھگو دیں۔ کھجور ایک پاؤ ہوتو اس میں پانی تقریباً دو کلو ہو۔ صبح اٹھ کر کھجوروں کو ہاتھوں سے ملیں۔ جس سے اس کے ریشے پانی میں حل ہوجائیں گے ۔ اس کے بعد چھان لیں اور نو ش جان کریں۔ اللہ ہم سب کا حامی وناصر ہو۔آمین

Sharing is caring!

Categories

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *