جوشخص یہ دعا سات بار پڑھ لے اسے دنیا کی کوئی بیماری نہیں چھو پائے گی

السلام علیکم دوستو کیسے ہو امید ہے، کہ آپ سب ٹھیک ٹھاک ہونگے

شفا اللہ تعالیٰ نے دینی ہے اور غموں بیماری کے متعلق کہا جاتا ہے کہ یہ انسان کے اپنے اعمال کی وجہ سے ہے اور آج جتنی بھی مہلک بیماریاں پھیل اور طرح طرح کے وائرس پھیل رہے ہیں وہ بیماریاں بداعمالیوں کی وجہ سے ہی پھیل رہے ہیں ۔ کہا جاتا ہے کہ جس طرح کے مسلمانوں کے اعمال آسمانوں

پر جاتے ہیں ویسے ہی فیصلے اللہ کی طرف سے زمین والوں کیلئے اُترتے ہیں اور آج جتنی نافرمانی اللہ تعالیٰ کی ہو رہی ہے اس سے ہر کوئی واقف ہے ۔ یہی وجہ ہے کہ عجیب عجیب بیماریاں او رنت نئے وائرس آئے رو ز پھیل رہے ہیں ۔

انسان کو چاہیے کو ہر حال میں اللہ تعالیٰ کی حمد بیان کرے ۔ زبان پر کبھی شکوہ نہ آنے دے اور مسنون دعاؤں کا احتمام بھی کرے ۔ آج ہم آپ کو ایسی دعا بتاتے ہیں موت کے علاوہ ہر بیماری کے شفا کیلئے اس دعا کو پڑھا جاسکتا ہے ۔ حضوراکرمﷺ نے فرمایا جوشخص کسی مریض کی عیادت کرے جسکی موت ابھی نہ آئی ہو ۔ تو اُس کے پاس بیٹھ کر سات مرتبہ یہ دعا پڑھے ۔ اَسْاَلُ اللهَ الْعَظِیْمَ رَبَّ الْعَرْشِ الْعَظِیْمِ اَنْ یَّشْفِیَکَ۔۔ میں عظمت والے اللہ اور عظیم عرش کے مالک سے دعا کرتا ہوں کہ وہ تمہیں اچھا کردے ۔

یہ اللہ سے اس کی عظمت اور اس کے عرش کے واسطے سے سوال کیا جارہا اور شفاکی درخواست کی جارہی ہے ۔ جب کامل یقین کیساتھ اس دعا کی کثرت کی جائیگی تو انشاء اللہ ہر قسم کی بیماری سے اللہ تعالیٰ شفاء عطاء فرمائے گا مہلک سے مہلک بیماری کیوں نہ ہو۔ ویسے تو یہ دعا مریض کی عیادت کرنے والے کیلئے بتائی گئی ہے کہ وہ سات مرتبہ اپنے بیماربھائی یا بہن کیلئے پڑھے یا د م کرے۔

یاد رکھیں چونکہ ہمارے ایمان بہت کمزور ہوچکے ہیں اسی لیے ہوسکتا ہے کہ ہمیں سات مرتبہ سے استفادہ نہ ہوسکا لہذا چاہیے دعا کی کثرت کی جائے اور جتنی زیادہ مقدار میں پڑھ کرکے دم کیا جائے زیادہ بہتر ہے ۔ یہ عمل احادیث صحیحا سے ثابت ہے اور اس کو خود حضور اکرمﷺ نے حکم فرمایا ہے اس لیے ہم اس کو حضورﷺ کی تعلیمات کی روشنی میں نبوی عمل کہہ سکتے ہیں۔

شکریہ
مطابق ادرک کا استعمال پٹھوں کے درد میں بیس سے پچیس فیصد تک کمی کرنے کی صلاحیت رکھتا ہے۔ یہ بھی پڑھیے : ادرک کی چائے کے حیرت انگیز فوائد، ادرک کی چائے بنانے کا طریقہ غذائی ماہرین کے مطابق ادرک میں گٹھیا اور جوڑوں کا درد کم کرنے کی صلاحیت ہوتی ہے،

ادرک میں موجود جنجرول نامی مرکب سوزش اور درد دور کرتا ہے۔ ایک اور تحقیق سے معلوم ہوا ہے کہ جب گھٹنوں کی تکلیف میں مبتلا لوگوں کو ادرک کے اجزا کھلائے گئے تو تکلیف میں کمی محسوس ہوئی۔ جوڑوں اور پٹھوں کی تکالیف کا علاج اگر آپ کو کمر میں درد ہے، یا آپ جوڑوں اور پٹھوں کے درد سے پریشان ۔

نوٹ: آپ نے بھی سنا ھو گا کی اچھی بات دوسروں تک پہنچانا ایک صدقہ جاریا ہے ۔۔۔ اگر آپ کو یہ پوسٹ اچھی لگی ھے تو ھم آپ سے گزارش کرتے ھیں کہ اس پوسٹ کو زیادہ سے زیادہ شئیر کریں
اپنے دوستوں میں اور چاہنے والوں میں۔۔۔۔
اللّہ تعالٰی ہمیں بھی پیارے نبی صلی اللّہ علیہ وسلم کی سنتوں پر عمل کی توفیق عطا فرمائے ۔ آمین یا رب العالمین.

Sharing is caring!

Categories

Comments are closed.