شوگر کے مریض یہ چٹنی ضرور بنالیں پیشاب کی جلن کا شافی علاج دوائی چھوڑیں

گرمی کی شدت سے موسم برسات میں اکثر قے متلی محسوس ہوتی ہے جسے بروقت کنٹرول نہ کیا جائے تو بعض حالات میں ہضے کی صورت اختیار کرلیتی ہے ایسی صورت میں مٹھے کا استعمال بے حد مفید موثر ثابت ہوا ہے ۔ یہ نظام ہاضمہ کی بے قاعدگی کو ختم کرتا ہے اور اسے تقویت بخشتا ہے ۔ بدہضمی کو دور کرتا ہے ۔ گرمی کیوجہ سے خون میں جوش پیدا کرنے کے عمل کو کم کرکے جسم کی حرارت کو معتدل بناتا ہے ۔

دانتوں کا پیلا پن دور کرنے کیلئے ایک سٹرابری کو میش کرکے اس میں آدھا چائے کا چمچ بیکنگ پاؤڈر مکس کرکے ٹوتھ برش سے پانچ منٹ دانتوں پر لگا رہنے دیں پھر دانتوں پر اچھی طرح برش کریں کہ پاؤڈر اور اسٹربری پیسٹ اتر جائے کلی کرلیں ہفتہ میں ایک مرتبہ یہ عمل کریں۔کلونجی کا تیل اور تل کا تیل ملا کر چند قطرے روزانہ کان میں ڈالنے سے کان کا درد ٹھیک ہوجاتا ہے ۔ ایک گڑ کی حسب خوراک ڈلی کوٹ کر فرائی پین میں ڈال کر چولہے پر رکھ دیں اس میں تھوڑا سا پانی ڈال دیں تاکہ شربت یا چاش بن جائے اس چاش کے مطابق اس میں چھلکا اسپغول ڈال دیں آدھا چمچ دیسی گھی ڈال دیں یہ حلوہ بن جائیگا ۔ اس کو ٹھنڈا کرکے آدھا ایک وقت کھالیں خونی پیچش کیلئے بہت مفید ہے ۔اگر بخار کا سبب پروٹین کی کمی ہو تو وافر مقدار میں گنے کا رس پینے سے یہ کمی دور ہوجاتی ہے اور بخار کی حدت اور شدت کم ہوتے ہوئے ختم ہوجاتی ہے

گنے کا رس فربہ کرتا ہے اس لیے دبلا پن دور کرنے کیلئے یہ موثر علاج ہے گنے کے رس کے باقاعدہ استعمال سے تیزی سے جسمانی وزن بڑھتا ہے ۔ یہ پیاس کو بجھاتا ہے خون کی کمی پیشاب کے رکنے اورامراض جگر میں بہت مفید ہے ۔ یرقان کے مرض میں گنے کا بکثر ت استعمال اپنا جواب نہیں رکھتا ۔ گنے کا رس پیشاب کی جلن کو ختم کرتا ہے ۔ چہل قدمی سے تین زبردست فوائد حاصل ہوتے ہیں جو عمر کو طول دینے اور صحت کو قائم رکھنے میں بے حد مددگار ہوتے ہیں۔ قبض دور ہوتا ہے خون کو آکسیجن ملتی ہے پورے جسم کی ورزش ہوجاتی ہے جس کے سبب بدن کو تازگی قلب کو فرحت اور ذہن کو شگفتگی میسر ہوتی ہے ۔ عصر کے وقت ایک گلاس ٹھنڈے پانی ایک چمچ شہد ملا کر پینے سے جگر کی گرمی دور ہوجاتی ہے ۔ میتھی کے استعمال سے آنکھوں کی پیلا ہٹ دور اور منہ کا کڑواذائقہ درست ہوجاتا ہے ۔ اس کے استعمال سے رال بہنے جیسے مسئلے سے نجات ملتی ہے ۔ بدہضمی اور قبض سے نجات کا بہترین حل ہے ۔ جسم سے کولیسٹرول کی سطح کم ہوتی ہے میتھی انسولین پیدا کرتی ہے ۔ شوگر کے مریض یہ چٹنی ضرورضرور استعمال کریں یہ شوگر کا مکمل علاج ہے ۔

لہسن چھلا ہوا آدھ چھٹانک ، ادرک تازہ ایک چھٹانک ، پودیہنہ سبز ایک چھٹانک ، انار دانہ کھٹا ایک چھٹانک، ان چاروں کو پیس کر چٹنی بنالیں اور صبح دوپہر شام ایک چمچ کھالیں پرانی سے پرانی شوگر یہاں تک کہ شوگر کیوجہ سے مریج کے جسم کے کسی حصہ کو کاٹنا بھی تجویز کیا گیا ہو تب بھی یہ چٹنی آزمودہ ہے ۔جسم کا ورم زخم اور معدے کی بیماری بھی بہت زیادہ مفید ہے ۔سرسوں کے ساگ کی تاثیر گرم خشک ہے ۔ اس میں وٹامن اے بی ، فولاد کیلشیم اور روغنیات پائے جاتے ہیں۔ سرسوں کا ساگ جلدی امراض کیلئے بہتر ہے ۔ اسے کھانے سے جلدی بیماریاں دور ہوجاتی ہیں۔ اعضاء کی خشکی خراش اور داغ دھبے دور کرنے کا علاج ہے ۔ جسم معدے سے گیس نکالتا ہے ۔ پیشاب کی جلن کیلئے روزانہ ایک چائے کا چمچ سفید زیرہ ، چائے یا ٹھنڈے پانی کے ہمراہ استعمال کریں۔

Sharing is caring!

Categories

Comments are closed.