عورت کے جسم تک پہنچنے کے لیے مرد دو کام کرتا ہے پہلا کام ۔۔۔ دوسرا کام۔۔۔

ایک خوبصورت لڑکی آپ کو خوبصورت مستقبل نہیں دے سکتی ۔ لیکن ایک خوبصورت مستقبل آپ کو بہت سی خوبصورت لڑکیاں دے سکتا ہے۔ عورت اپنی عمر کے بارے میں اس وقت جھوٹ بولنا شروع کرتی ہے۔ جب اس کا چہرہ سچ بولنا شروع کردے ۔ چنگاری میں شعلوں میں تبدیل کردینا آسان ہے ۔ مگر چنگار ی پیدا کرنا بہت مشکل ہے۔ عورت کے جسم تک پہنچنے کے لیے مرد دو کام کرتا ہے جو کہ عورت کو نہیں پتالگتا ۔ پہلاکام: ہمدردی دکھاتا ہے، دوسراکام: عورت کو یقین دلاتا ہے کہ وہ خوبصورت ہے۔ عورت کی ناپسندیدہ مرد کی محبت بھی ہوس لگتی ہے۔ اور پسندیدہ مرد کی ہوس بھی محبت لگتی ہے۔

اگر بد قسمتی سے آپ کو کوئی ایسا شخص میسر نہیں تو آپ کسی کے لیے ایسا شخص بن جائیں ۔ شاید آپ کے نصیب کسی کا مسیحا بننا لکھا ہو۔ عورت کی سب بڑی غلطی یہ ہے کہ وہ ایک مرد کے پیچھے بہت عرصہ ضا ئع کردیتی ہے۔ کہ شاید سدھر جائے۔ تم نے صرف جسم کو پانا ہی محبت کیوں سمجھا ہے ؟ یہ جسم تو ہرجگہ سستے دام میں مل جائے گا۔ کیونکہ ایک غربت ایک مجبوری ہی تو ہے جو عورت کو سستے داموں میں اپنی عزت فروخت کروایا کرتی ہیں۔

اگر مرد ہو تو اس طرح عورت سے عشق کرو کہ وہ تمہاری علاوہ کسی کو سوچنا بھی گن اہ سمجھے باقی اگر تم سستے عاشق بنو گے تو بیوفائی ہی مقدر ہوگی۔دنیا میں ہرشخص کے نصیب میں محبت سمیٹنا نہیں لکھا ہوتا کچھ لوگوں کو صرف محبت باٹنے کے لیے بنایا گیا ہے ۔ عورت محبت کا اظہار کرکے قید ہوجاتی ہے۔ جبکہ مرد آزاد ہوجاتا ہے۔ جس دن تمہارا سب سے قریبی تم پرغصہ کرنا چھوڑ دے تو سمجھ جاؤ تم اسے کھو چکے ہو۔کون کہتا ہے کہ مرد بدل جاتے ہیں۔

مرد کبھی نہیں بدلتے انہیں شادی سے پہلے بھی شادی کا شوق ہوتا ہے اور شادی کے بعد بھی۔ عورت کے بارے میں مشہور ہے کہ عورت راز نہیں رکھ سکتی۔ لیکن حقیقت یہ ہے۔کہ اگر عورت کو راز رکھنا نہ آتا ہو تو کوئی بھی مرد سر اٹھا کرنہ جی سکتا۔ دوست بنانے سے پہلے کبھی کسی کے چہرے کو مت دیکھیں بلکہ اس کے اخلاق اور چاہت کو دیکھیں کیونکہ اگر سفید رنگ میں وفا ہوتی تو نمک زخموں کی دوا ہو تی۔ یاد رکھیے ! جب کوئی مرد یہ کہے کہ وہ لڑکی سے پیار کرتا ہے ؟

تو اس کا مطلب یہ ہے کہ وہ عشق کے نام پر اس کے کپڑے اتارنے چاہتا ہے۔ یقین جانیے اس نے محبت میں مجھے اور نکاح میں کسی اور قبول کیا۔وہ جگہ چھو ڑ دو جہاں تمہارے احساس اورتمہارے الفاظ کی قدر نہ ہو پھرچا ہے وہ کسی کا گھر ہو یا پھر کسی کا دل ۔ عورت کی فطرت ہوتی ہے۔ کہ وہ گھر کی خاطر بہت سی قربانیاں دیتی ہے۔ کڑوی باتیں اور تلخ رویے بھی سہہ جاتی ہے۔ مگر اس کا ہمسفر اسے نظرانداز کر دے تو وہ اندر سے ٹوٹ جاتی ہے۔

کیونکہ عورت کا حوصلہ اسی کا شوہر ہی ہوتا ہے۔ بے شک پاکیزہ اور وفادار مرد بھی عورت کا مان عورت کا غرور ہوتے ہیں۔ مجھے ہمیشہ چاردیواری میں رہنے والے لڑکیوں سے ڈر لگتا ہے کیونکہ انہوں نے دنیا میں دیکھی ہوتی۔

Sharing is caring!

Categories

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *