”اگر مرد چاہتا ہے کہ وہ دنیا کی تمام عورتوں کو خوبصورت اور حسین نظر آئے تو“

اگر آپ مرد ہیں اور کوئی عورت آپ کے عشق میں مبتلا نہیں تو معذرت آپ تربوز ہیں ہم ایسے معاشرے میں رہتے ہیں جہاں عورت عورت پیدا ہونے پر سو رہی ہوتی ہے بکری نے آزادی مانگی گڑیا نے سب سے پہلے حمایت کی نظر میں عورت نے جب بھی سمجھوتہ کیا اس کی وجہ صرف ایک خوف ہے اگر اس مرض نے مجھے چھوڑ دیا تو میرا کیا ہوگا اس بات کو سمجھیں کہ جو بلاوجہ چھوڑ جائیں اس پر روتے نہیں بلکہ شکر ادا کرتے ہیں

آپ کسی کو بھی زبردستی دو کاموں کے لئے مجبور نہیں کر سکتے ایک محبت اور دوسری عبادت کیونکہ یہ دونوں اور دونوں کا رشتہ روح سے جڑا ہوتا ہے جب انسان کو اندر سے کچھ کھا رہا ہو تو اسے کچھ کھانے کا دل نہیں کرتا یہ جو محبت ہوتی ہے نہ یہ نفس کو مار دیتی ہے محبت میں بندے کی میں مر جاتی ہے مگر یہ ان کی محبت خود دار بہت ہوتی ہے محبت کبھی بھی کسی پر بوجھ بننا پسند نہیں کرتی محبت کرنے والے مر جانا پسند کرتے ہیں مگر کسی پر بوجھ بننا پسند نہیں کرتے

اگر تم لوگوں کے چار دن کے کھیل کو ہمارے ہاں محبت نہیں کہتے میاں اگر مر جاتا ہے کہ وہ دنیا کی عورتوں کو خوبصورت اور حسین نظر آئے اور عورتیں اسے پسند کرنے لگے تو اسے چاہیے کہ وہ اپنے کردار کو مضبوط کر لیں ہمیشہ نیچے الفاظ بولو تاکہ کبھی الفاظ واپس لینے پر جائیں تو کڑوی نہ لگے اگر التجائیں رد ہوتی تو ایک بھی نہیں فرماتا کہ مجھ سے مانگو میں دل نہیں دونگا

Sharing is caring!

Categories

Comments are closed.