مسافروں کے لیے اہم اعلان کر دیا

ابوظبی نے پاکستان سمیت تمام ممالک کے مسافروں کے لیے اہم اعلان کر دیا
پی سی آر رپورٹ حاصل کرنے کے بعد 48 گھنٹوں میں سفر کرنا ہو گا، 4 روز سے زیادہ قیام پر بھی پی سی آر ٹیسٹ ہو گا

ابوظبی( نومبر 2020ء) ابوظبی واپس جانے والے پاکستانی مسافر ہوشیار ہو جائیں۔ ابوظبی حکومت کی جانب سے اعلان کیا گیا ہے کہ 8 نومبر 2020ء (اتوار) سے ابوظبی آنے والوں کے لیے نئی شرائط لاگو کی جا رہی ہیں۔ ابوظبی ایمرجنسی کرائسز اینڈ ڈیزاسٹر کمیٹی نے اعلان کیا ہے کہ جو افراددیگر ممالک سے ابوظبی واپس آرہے ہیں ، انہیں اپنے ملک کی لیبارٹری سے کورونا کے پی سی آر ٹیسٹ کی نیگیٹو رپورٹ حاصل کرنے کے بعد 48 گھنٹوں میں ابوظبی کا سفر کرنا ہوگا۔اگر یہ مُدت گزر جاتی ہے تو پھر نئے سرے سے ٹیسٹ کروا کے 48 گھنٹوں کے اندر سفر کرنا پڑے گا۔ابوظبی پہنچنے والے تمام مسافروں کا پہلے روز پی سی آر یا DPI ٹیسٹ لیا جائے گا۔ کرائسز مینجمنٹ کمیٹی نے مزید اطلاع دی ہے کہ وہ تمام مسافر جو ابوظبی آنے کے بعد 4 روز سے زیادہ عرصہ یہاں ٹھہریں گے، انہیں پہنچنے کے بعد چوتھے روز PCR ٹیسٹ کروانا لازمی ہو گا۔ جبکہ جو مسافر آٹھ روز یا اس سے زیادہ عرصہ ابوظبی میں قیام کریں گے، انہیں چوتھے روز بھی پی سی آر ٹیسٹ کروانا پڑے گا اور پھر آٹھویں روز بھی یہ ٹیسٹ کروانا لازمی ہو گا۔ ابوظبی میں داخلے کا دن پہلا دن شمار ہو گا۔ کورونا ٹیسٹ سے متعلق ان نئی سفری شرائط کا اطلاق اماراتی شہریوں ، ابوظبی اور دیگر اماراتی ریاستوں کے ویزہ ہولڈرز پر بھی ہو گا۔

Sharing is caring!

Comments are closed.