عمرہ زائرین کے کرایوں کا اعلان کر دیا

پی آئی اے نے مدینہ اور جدہ جانے والے عمرہ زائرین کے کرایوں کا اعلان کر دیا
کراچی سے اکانومی کلاس کا کرایہ 91 ہزار روپے ہو گا، جبکہ دیگر شہروں سے اکانومی کلاس کا کرایہ 96 ہزار مقرر کیا گیا ہے

کراچی(10 نومبر2020ء ) سعودی عرب کی جانب سے پاکستان سمیت دُنیا بھر کے عمرہ زائرین کویکم نومبر 2020ء سے مملکت آنے کی اجازت دے دی ہے۔ جس کے بعد پاکستان میں موجود لاکھوں مسلمانوں کے دل جلد از جلد یہ سعادت حاصل کرنے کے لیے مچل رہے ہیں۔ دُنیا بھر میں عمرہ کرنے والوں میں پاکستانیوں کا نمبر پہلا ہوتا ہے۔ گزشتہ سال بھی 17 لاکھ سے زائد پاکستانیوں نے عمرے کی سعادت حاصل کی تھی۔پاکستان کی قومی فضائی کمپنی پی آئی اے نے جدہ اور مدینہ منورہ جانے والے عمرہ زائرین کے لیے نئے کرایوں اور عمرہ پالیسی کا اعلان کر دیا ہے جو 31 دسمبر 2020تک لاگو رہے گی۔ترجمان پی آئی اے کے مطابق کراچی سے اکانومی کلاس کا ریٹرن کرایہ بشمول ٹیکسز 91000 روپے ہوگا جبکہ پاکستان کے دیگر شہروں سے اکانومی کلاس کا کرایہ بشمول ٹیکسس 96000 روپے ہوگا۔ تمام زائرین کو روانگی سے قبل ایڈوانس میں ٹکٹ بک کرانی ہو گی۔ ۔ زائرین کی واپسی اور روانگی کی تبدیلی کی صورت میں اضافی چارجز ادا کرنا ہوں گے۔ ۔ مقررہ تاریخ پرسفر نہ کرنے والے زائرین کو 125 ڈالرز ادا کرنا ہوں گے۔۔ ٹکٹ ریفنڈ کروانے کی صورت میں 100 ڈالرز رقم میں سے کٹوتی ہوگی۔پی آئی اے کے نیٹ ورک پر بھی عمرہ کے ٹکٹ فروخت کیے جا رہے ہیں۔ پی آئی اے کی جانب سے اقامہ ہولڈرز اور عمرہ زائرین کے لیے الگ الگ کرائے مقررکیے جاتے ہیں۔ایک پاکستانی ٹریول گروپ کا کہنا ہے کہ قومی ایئر لائن کی جانب سے دو طرفہ ٹکٹ کے کرایوں کے اعلا ن کے بعد آج کے روز سے عمرہ کے لیے بکنگ بھی شروع کر دی جائے گی ، تاہم عمرہ کے مختلف پیکیجز کی وجہ سے عمرہ زائرین کے اخراجات میں اضافہ بھی ہو سکتا ہے۔ اس کی وجہ کورونا ایس او پیز ہیں۔

Sharing is caring!

Comments are closed.