متحدہ عرب امارات کے ویزوں

متحدہ عرب امارات کے ویزوں سے متعلق وزیر خارجہ کا اہم بیان

جو ویزے جاری ہو چکے ہیں ان پر کوئی پابندی نہیں ہے،دشمن آئے روز کوئی نہ کوئی رخنہ تلاش کرتے ہیں تاکہ تعلقات کو نقصان پہنچے۔وزیر خارجہ شاہ محمود قریشی کی گفتگو
اسلام آباد ( یکم دسمبر 2020ء) : وزیر خارجہ مخدوم شاہ محمود قریشی نے کہا ہے کہ متحدہ عرب امارات کیساتھ ہمارے اچھے اور مستحکم تعلقات ہیں ان حوالے سے قیاس آرائیاں بالکل مناسب نہیں ۔وزیر خارجہ نے مزید بتایا کہ جو ویزے جاری ہو چکے ہیں ان پر کوئی پابندی نہیں ہے۔دشمن آئے روز کوئی نہ کوئی رخنہ تلاش کرتے ہیں تاکہ تعلقات کو نقصان پہنچے۔دوست ممالک کے ساتھ تعلقات میں رخنہ ڈالنے والوں سے خبردار رہنا چاہئیے، این این آئی کی رپورٹ کے مطابق پیر کو وزیر خارجہ مخدوم شاہ محمود قریشی نے کہا کہ متحدہ عرب امارات کے ساتھ ہمارے اچھے اور مستحکم تعلقات ہیں ان کے حوالے سے قیاس آرائیاں بالکل مناسب نہیں ۔ انہوںنے کہاکہ میری نیامے میں او آئی سی وزرائے خارجہ کونسل کے اجلاس کے موقع پر متحدہ عرب امارات کی وزیر مملکت برائے بین الاقوامی امور کے ساتھ ملاقات ہوئی اور میں نے ان کے ساتھ ویزوں کا معاملہ اٹھایا ،ابھی تک یہی بات سامنے آ رہی ہے کہ یو اے ای ویزوں کے اجراء کے حوالے سے نئے پروٹوکول وضع کر رہا ہے اور پاکستان سمیت تیرہ/چودہ ممالک کے شہریوں کے نئے ویزوں کے اجراء پر عارضی پابندی عائد کی گی ہے جن لوگوں کے ویزے لگے ہوئے ہیں ان پر کوئی قدغن نہیں ہے۔دوسری جانب وزیر اعظم پاکستان کے معاون خصوصی برائے اوورسیز پاکستانیز زلفی بخاری کا کہنا ہے کہ میری یو اے ای کے لیبر منسٹر سے بات ہوئی ہے انہوں نے مجھ سے گلہ کیا ہے کہ پاکستان اور امارات کے اتنے اچھے تعلقات ہیں تو پھر آپ کا میڈیا اماراتی حکومت کی جانب سے پاکستانیوں پر ویزہ پابندی کی خبریں کیوں چلا رہا ہے۔ جس پر مجھے ان سے معافی مانگنی پڑی ہے۔ میں نے پہلے بھی اپنے ٹویٹر کے ذریعے پاکستانیوں پر ویزہ پابندی کی تردید کی تھی جو کچھ اینکروں کو پسند نہیں آئی۔ امارات کی جانب سے پاکستانیوں پر ویزے کے حوالے سے کوئی پابندی نہیں ہے۔ دراصل کورونا کی وبا نے امارات کو بھی بُری طرح متاثر کیا ہے۔ پاکستان یو اے ای کا قریبی ملک ہے، ہمیں ان کے مسئلے کو سمجھنا چاہیے۔

Sharing is caring!

Comments are closed.