سینیٹ میں عمران خان کو اکثریت

پاکستان پیپلز پارٹی کے نواز شریف کی محبت میں گرفتا-ر ہونے کی وجہ ہے

ان کو ڈر ہے کہ اگر سینیٹ میں عمران خان کو اکثریت مل جاتی ہے تو پھر 18 ویں ترمیم ختم ہوجائے گی۔ تجزیہ کار طاہر ملک
اسلام آباد ( 11 دسمبر 2020ء) : نجی ٹی وی چینل کے پروگرام میں بات کرتے ہوئے صحافی و تجزیہ کار طاہر ملک نے کہا کہ پاکستان پیپلز پارٹی نواز شریف کی محبت میں اس قدر گر-فتار نہیں ہے۔ پیپلز پارٹی کا اپنا بھی ایک مسئلہ ہے۔ اس وقت آپ کے 52 سینیٹرز جائیں گے اور جو امکانات ہیں، اُس کے مطابق اگر حالات نارمل رہے تو پی ٹی آئی کے اتحادی 37 سینیٹرز مل جائیں گے جس کے بعد کُل تعداد 57 ہو جائے گی۔57 کا مطلب ہے کہ وزیراعظم عمران خان کے پاس سینیٹ میں بھی اکثریت ہو جائے گی۔ انہوں نے کہا کہ آصف علی زرداری کے طوطے کی جان اٹھارہویں ترمیم میں ہے۔ اٹھارہویں ترمیم سے سندھ کو پیسے ملتے ہیں اور اب خدشہ یہ ہے کہ اگر سینیٹ میں عمران خان کو اکثریت مل جاتی ہے تو پھر 18 ویں ترمیم ختم ہوجائے گی۔اُن کو یہی ڈر ہے کہ اگر اسمبلی کے ساتھ ساتھ عمران خان نے سینیٹ میں بھی اکثریت حاصل کر لی تو اٹھارہویں ترمیم خطرے میں پڑ جائے گی اور سندھ کے پیسے بند ہو جائیں گے۔

Sharing is caring!

Comments are closed.