مریم نواز پارٹی رہنماؤں پر برہم

مینار پاکستان جلسے کی ناکامی پر مریم نواز پارٹی رہنماؤں پر برہم
کن لوگوں نے جلسہ کامیاب بنانے کے لیے کام نہیں کیا ، مریم نواز نے تلاش شروع کر دی۔ ذرائع
لاہور (14 دسمبر 2020ء) : مینار پاکستان جلسے کی ناکامی پر مسلم لیگ ن کی نائب صدر مریم نواز برہم ہو گئیں۔ تفصیلات کے مطابق ذرائع مسلم لیگ ن کی نائب صدر مریم نواز نے مینار پاکستان جلسے کی ناکامی پر لیگی رہنماؤں پر برہمی کا اظہار کیا۔ جلسے کو کامیاب بنانے کے لیے مریم نواز کی بھرپور مہم بھی کامیاب نہیں ہوئی۔ جس کی وجہ سے نائب صدر مریم نواز پارٹی رہنماؤں سے ناراض ہو گئی ہیں۔
ذرائع کا کہنا ہے کہ کن لوگوں نے جلسے کو کامیاب بنانے کی کوشش نہیں کی ، مریم نواز نے ان رہنماؤں کی تلاش شروع کر دی۔ ذرائع نے بتایا کہ مریم نواز کا خیال ہے کہ پارٹی کے کچھ لوگ کامیاب انہیں ہوتا نہیں دیکھنا چاہتے۔ یہی وجہ ہے کہ پارٹی کے چند لوگوں نے جلسہ کامیاب بنانے کی کوشش نہیں کی۔
یاد رہے کہ پاکستان ڈیموکریٹک موومنٹ (پی ڈی ایم) نے گذشتہ روز لاہور میں مینار پاکستان میں جلسہ کیا ، اس جلسے کی میزبان مسلم لیگ ن تھی ، جلسے کی ناکامی پر مسلم لیگ ن کے کارکنان نہ صرف مایوس ہوئے بلکہ انہیں لیگی رہنماؤں کی ڈانٹ بھی کھانا پڑ گئی۔جلسے میں کم لوگوں کی شرکت نے پی ڈی ایم کی قیادت کو بھی مایوس کیا ، یہی وجہ ہے کہ پی ڈی ایم کے سربراہ مولانا فضل الرحمان نے آج مریم نواز اور بلاول بھٹو زرداری کو ملاقات کے لیے طلب کر لیا ہے۔ اجلاس میں اے این پی کے میاں افتخار، محمود خان اچکزئی، اور اختر مینگل شرکت کریں گے۔ ذرائع کے مطابق مولانا فضل الرحمان کی سربراہی میں طلب کیا جانے والا اجلاس آج دوپہر دو بجے منعقد ہو گا۔یہاں یہ بات قابل ذکر ہے کہ پی ڈی ایم کے لاہور جلسے میں شریک عوام کی تعداد کے حوالے سے متضاد اطلاعات ہیں۔ تجزیہ کار ہارون الرشید نے کہا کہ جلسے میں 20 ہزار سے زیادہ لوگ نہیں آئے ۔ جبکہ مسلم لیگ ن کے رہنما شاہد خاقان عباسی نے جلسے میں ایک لاکھ افراد کے شریک ہونے کا دعویٰ کیا ، اور تو اور جمیعت علمائے اسلام (ف) کے رہنما مفتی کفایت اللہ نے دعویٰ کیا کہ جلسے میں دس لاکھ سے زائد لوگ شریک تھی۔ دوسری جانب حکومتی نمائندوں کے مطابق جلسے میں صرف دس سے پندرہ ہزار لوگوں نے شرکت کی۔

Sharing is caring!

Comments are closed.