سکیورٹی اسٹاف نے اُن کو روک دیا

محمد زبیر نے آرمی چیف سے ملاقات کرنے کی کوشش کی لیکن آرمی چیف کے سکیورٹی اسٹاف نے اُن کو روک دیا
میری اطلاع کے مطابق محمد زبیر کی آرمی چیف سے کوئی ملاقات نہیں ہوئی۔ سینئیر صحافی عامر متین

اسلام آباد ( 26 جنوری 2021ء) : نجی ٹی وی چینل کے پروگرام میں بات کرتے ہوئے سینئیر صحافی و تجزیہ کار عامر متین نے کہا کہ جنرل باجوہ سنڈے برنچ کے لیے اسلام آباد میں گئے تھے اور اپنے اہل خانہ کے ساتھ گئے۔ لائن میں لگ کر لوگوں نے اُن سے ملاقات کی۔ انہوں نے کہا کہ اعزاز سید ہمارے صحافی ساتھی ہیں

tv

جنہوں نے اپنے ٹویٹ میں لکھا کہ محمد زبیر نے انہیں کنفرم کیا کہ ان کی باجوہ صاحب سے دس منٹ کی ملاقات ہوئی۔ محمد زبیر کی آرمی چیف سے ملاقات کا تنازعہ پہلے ہی گرم ہے۔ اس حوالے سے متضاد اطلاعات چل رہی ہیں۔ عامر متین نے کہا کہ مجھے ایک عینی شاہد نے بتایا کہ کافی لوگ آرمی چیف سے سلام لینے کے لیے آرہے تھے ، محمد زبیر واحد تھے جنہیں آرمی چیف کے اسٹاف نے روک دیا اور انہیں آگے نہیں جانے دیا۔
انہوں نے کہا کہ میری اطلاع یہ ہے کہ آرمی چیف سے محمد زبیر کی کوئی ملاقات نہیں ہوئی۔ میری اطلاعات محمد زبیر کے بالکل اُلٹی ہے۔ انہوں نے آرمی چیف کے لائن میں لگ کر آملیٹ لینے والی بات پر تبصرہ کرتے ہوئے کہا کہ پاکستان میں خبریں اس قدر کم ہیں کہ اب آرمی چیف کا لائن میں لگ کر آملیٹ لینا بھی ایک خبر بن گیا ہے۔ عامر متین نے مزید کیا کہا آپ بھی دیکھیں:

Sharing is caring!

Comments are closed.