قسمت والوں کو ملتا ہے

فلسطینی لڑکی نے شہا-دت کے 3سال بعد والد کو خواب میں اپنی قبر کو اونچی جگہ منتقل کرنے کا کہا جب قبر کھودی گئی اندر سے کیا نکلا پوری دنیا ششد رہ گئ

اسلام آباد: شہا-دت ایک عظیم رتبہ اور بہت بڑا مقام ہے جو قسمت والوں کو ملتا ہے اور وہی خوش قسمت اسے پاتے ہیں جن کے مقدر میں ہمیشہ کی کامیابی لکھی ہوتی ہے شہا-دت کا مقام نبوت کے مقام سے تیسرے درجے پر ہے اور اللہ پاک فرماتے ہیں کہ شہید کو مر-دہ مت کہو، وہ زندہ ہیں ہاں بس تم انسانوں کو شعور نہیں ۔ یوں تو آئے روز اللہ رب العزت کی وحدانیت کی نشانیاں ہم لوگ دیکھتے

shaheed

رہتے ہیں, مگر کبھی کبھار ایسے محیر العقول واقعات رونما ہوتے ہیں جن کو دیکھنے کے بعد اللہ پاک پر ایمان مزید بڑھ جاتا ہے ۔ ایسا ایک واقعہ فلسطین میں پیش آیا جب ایک شہید لڑکی نے اپنی شہا-دت کے 3سال بعد اپنے والد کے خواب میں آکر کہا کہ میری باڈ-ی کو کسی اونچی جگہ منتقل کر یں کیونکہ اس جگہ گندگی ہے ۔ اس کے والد نے جب بیٹی کی قبر کھولی تو اندر جو مناظر تھے وہ دیکھ کر وہاں موجود ہر شخص کی زبان سے نعرہ تکبیر بلند ہوا ۔ کشادہ اور خوشبودار قبر دیکھ کر ہو کوئی اللہ اکبر کہنے لگا

Sharing is caring!

Comments are closed.